Kashaf Gondal Poetry

میں سمجھ نا پاؤں فتووں کو

مجھے تقویٰ ہی ہے راس سائیں

میں تنگ ہوں ان فتنوں سے

مجھے اصل کی ہے تلاش سائیں

میں خیرو شر کے بیچ بھنور

مجھے پوری چاہیے پیاس سائیں

نفرت دهوڑے ہے رگوں میں سب کی

مجھے محبت کی ہے آس سائیں

میں سیکھ نا پاؤں عشق کے اصول

مجھے بندگی ہی ہے راس سائیں

میں سمجھ نا پاؤں فتووں کو

مجھے تقویٰ ہی راس سائیں

*****

کشف گوندل

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.


*