Gustakhana Khake Article By Mariam Quraishi

“گستا خانہ خاکے”
مریم قریشی

کی محمد سے وفا تو ہم تیرے ہیں
یی جہاں چیز ہے کیا لوح و قلم تیرے ہیں
جیسا کہ آپ لوگ جا نتے ہیں ہا لینڈ کا ایک سیا ست دان ن حضور پاکؐ کے گستا خا نہ خا کے بنا نے کا مقا بلہ منعقد کروانے جا رہا ہے جس میں کا فی لو گوں نے حصہ لیا ہے اور ان لو گوں نے نعو ذ بِ للہ کچھ خا کے شا ئع بھی کر دئیے ہیں ، سو شل میڈیا پر کچھ عر صے سے اس گستا خی کے خلاف آواز ا ٹھا ئ جا رہی ہے۔ دنیا میں تمام مذا ہب کی عزت کرنا ہر انسان کا فر ض ہے چا ہے وہ جس قبیلے یا مذ ہب سے تعلق ر کھتا ہو، ہم مسلمان ہیں آپؐ ہمارے آ خری نبی ہیں ، حضور پاکؐ وا حد وہ ہستی ہیں جن کی کوئ بھی تصویر نہیں ہے اور نہ کوئ خا کہ ہے ، ہمارے خدا نے نبی پاک پر قر آن اتارا ہے، ہمارے نبی کو کسی نے نہیں دیکھا ہوا اس کے با وجود دو ارب کے قریب مسلمان آپؐ کے فا لور ہیں۔ ہمارے نبی کی شان قر آنِ مجید فر قان حمید میں کئ بار بیان کی جا چکی ہے، نبی پاک ؐ کی عصمت کی خود اللہ تعا لی قسم کھا تا ہے ۔ تو آج کل ہما رے نبی پاکؐ کے خلاف گستا خانہ جتنا بھی مواد شا ئع کیا جا رہا ہے وہ ہماری ، ہمارے مذہب ہمارے نبی پاک اور ہمارے خدا کی تو ہین ہے، جبکہ ہمارا عقیدہ ہے کہ ہم نے حضور پاکؐ پر بغیر دیکھے یقین ر کھا ہے تو کو ئ بھی دوسرا شخص آپ ؐ کے خا کے کیسے جا ری کر سکتا ہے، دنیا کا ہر مذہب شا ئستگی کی تعلیم دیتا ہے تو یہ کیسی بات ہے کہ کرو ڑوں مسلما نوں کے جذ بات سے ایسا بھیا نک کھلواڑ کیا جا رہا ہے ، یہ سراسر انسا نیت کی تو ہین ہے جس شخص کی گو اہی خود قر آن دے رہا تو با قی پیچھے رہ کیا جا تا ہے، میں بحثیت مسلمان اور آخری نبی کی امتی ہو نے کی حثیت سے اس بات کی شدید مذمت کر تی ہوں، ٹوٹ جا ئیں وہ ہا تھ جو میرے نبی کے خا کے بنا ئیں، بر باد ہو جا ئیں وہ آنکھیں جو تصور کر کے ہمارے نبی کے خا کے بنا تی ہیں اور یہ اللہ کا حکم ہے کہ قیامت تک جو بھی فتنے آئیں گے سب تباہ بر باد ہوں گے قرآن مجید میں وا ضح الفاظ میں ہے کہ محمد تم مردوں میں سے کسی کے باپ نہیں بلکہ اللہ کے رسول اور آ خری نبی ہیں،اور قر آن پاک کی حفا ظت کا ذمہ اللہ تعا لیٰ نے خود لیا ہے ۔ اس بات کو مغرب نے Freedom of Speech کا نام دیا ہے، ایسی کیا فریڈم جو ایک مذہب اور اس کے کرو ڑوں پیرو کاروں کی تو ہین کرے ، ان کے جذ بات مجروح کرے، غرق ہو جا ئیں ایسے لوگ جو ہمارے مذہب کے ساتھ گھنا و نا کھیل کھیل رہے ہیں۔مندر جہ ذیل با توں پر عمل کر کے ہم امتی ہو نے کا حق ادا کر سکتے ہیں۔
1: ہا لینڈ کی تمام مصنو عات کا اپنے اپنے ملک میں با ئیکاٹ کر یں۔
2:اپنے ملک میں فارن ایمبیسی میں احتجاج ریکارڈ کروا ئیں۔
3:ہالینڈ کی ایمبیسی بند کر وائیں۔
4: وسیع پیما نے پر پر امن احتجاج کیا جائے ، چا ہے وہ سوشل میڈیا پر ہو یا ویسے۔
5: حضور پاک کی تعلیمات کثرت سے پھیلائ جا ئیں۔
6:آپ ؐ کی احادیث کی کتا بیں زیادہ سے زیادہ خریدی جا ئیں ۔اور ان کا مواد کثرت سے سوشل میڈیا پر شئیر کیا جا ئے۔
7:کثرت سے درعد پاک پڑھا جا ئے اور اس چین کو زیادہ سے زیادہ پھیلا یا جا ئے۔
8: تبلیغی جما عتیں زیادہ سے زیادہ اس بات کی طرف لوگوں کی توجہ دلا کر انہیں تمام با توں کی تلقین کریں۔
9: بین الاقوامی طور پر احتجاج ریکارڈ کر وا ئے جا ئیں ۔
10: پرنٹ میڈیا کے ساتھ ساتھ الیکڑانک میڈیا کو اس میں زیادہ سے زیادہ انوالو کیا جا ئے۔ اس متنازع مو ضوع پر زیادہ سے زیادہ پرو گرام کر نے چا ہیں اور انہیں بار بار چلا یا جا ئے اس مقصید کے لیے سوشل میڈیا کی ویب سا ئٹسٹس پر ایکٹو رہ کر الیکڑانک جنگ لڑی جا ئے۔
11: پر امن احتجا جی ریلیاں نکا لی جا ئیں ۔
12: ہا لینڈ کے ساتھ تمام کاروبار بند کیا جا ئے۔
13: حضور پاک کی تعلیمات زیادہ سے زیادہ پھیلا ئ جا ئیں۔اور سنت پر عمل درآمد کیا جا ئے۔
14:اقوام متحدہ اور او آئ سی کے پلیٹ فارم پر اس چیز کی بھر پور مذ مت کی جا ئے۔
15:غیر مسلم دوست مما لک کو بھی اس ا حتجاج میں شامل ہونے کی دعوت دی جا ئے۔
16: تمام مسلم ممالک منظم ہو کر اس کا حل سو چیں تا کہ یہ فتنہ آخری بار ہو دوبارہ اس کو سر اٹھا نے کا مو قع نہ ملے۔
آپ سب سے گزارش ہے کےان با توں پر عمل کر یں اور سب مل کر ایک مہذب طر یقے سے اس گستا خانہ مواد کی مذمت کر یں اور ایک سچا عا شق رسول ہو نے کا ثبوت دیں، اور اس بات کو زیادہ سے زیادہ پھیلا ئیں، اللہ ہم سب کا حا می و نا صر ہو۔آمین۔
اور یہ میرے اللہ کا وعدہ ہے کہ جو بھی اس کے محبوب کے ساتھ زیا دتی کا مر تکب ہو گا اس کا دین و دنیا میں مزاق بنے گا اور وہ تباہ بر باد ہو گا۔
غلام ہیں غلام ہیں رسول کے غلام ہیں
غلامیِ رسول میں موت بھی قبول ہے
گر ہو نہ عشق مصطفیٰ یہ زندگی فضول ہے۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.


*